Search

فوج کے سپاہی فاٹا اور بلوچستان میں مار دھاڑ کیوں کر رہے ہیں؟ کھریاں کھریاں۔۔۔راشد مراد۔۔۔21/06/2020


کھریاں کھریاں کے ایک قاری نے سوال پوچھا ہے کہ فاٹا اور بلوچستان میں اپنے ہی لوگوں کا قتلِ عام کرنے والی پاکستان کی فوج ملک کی وفادار ہے یا سب سے بڑی غدار ہے؟ ان صاحب نے اپنی معلومات شئیر کرتے ہوئے بتایا ہے کہ برطانیہ نے جب ہندوستان پر قبضہ کر رکھا تھا تو اس نے فوج اس لئے بنائی تھی تا کہ مقامی فریڈم فائٹرز کو ختم کیا جا سکے۔۔۔ہندوستان کی تقسیم کے بعد اسی مائنڈ سیٹ کے ساتھ یہ فوج پاکستان کے حصے میں آئی اور اب اپنے ہی لوگوں کا چھوٹے صوبوں میں قتل عام کر رہی ہے۔

میری زاتی رائے میں تو ان صاحب کی بات کافی حد تک درست ہے۔۔۔ برطانوی راج کے دوران ہندوستان کی آبادی کے تناسب سے انگریز یہاں پر آٹے میں نمک سے بھی کہیں کم تھا اس لئے اس نے مقامی ٓابادی کو ہی اپنے اقتدار کو مضبوط بنانے کے لئے استعمال کیا۔۔۔انگریزوں نے اس کام کے لئے ایک تو ہندوستان میں مراعات یافتہ طبقہ پیدا کیا جسے زمینیں اور خطابات دیئے اور انہیں اس کام پر لگائے رکھا کہ وہ اپنی جاگیریں اور نوابیاں بچانے کے لئے انگریز کی حکومت کا ساتھ دیتے رہیں

اس کےعلاوہ مذہبی تقسیم کو بھی انگریزوں نے بہت فروغ دیا اور اسی دور میں ہندوستان میں مسلمانوں میں مذہبی عقائد کی بنیاد پر بھی ایک واضح تقسیم ہو گئی جس نے مسلمانوں کو بہت کمزور کر دیا اور یہ تقسیم اب تک جاری ہے اور اسی تقسیم کا فائدہ پاکستان بننے کے بعد جرنیلی سیاست دانوں نے بھی اٹھایا۔۔۔انگریز نے مقامی لوگوں کو بھی فوج میں شامل کیا اور دیسی افسروں کو ایسی ٹریننگ دی کہ یہ کالے انگریز بھی اپنے ہی لوگوں کے خلاف ہتھیار استعمال کرتے رہے۔

پاکستان بننے کے وقت بظاہر تو ملک سیاستدانوں کے حوالے کیا گیا لیکن اصل اقتدار برطانوی فوج کے ان افسروں کو دیا گیا جو کہ اب پاکستانی فوج کی یونیفارم میں تھے۔۔۔برطانیہ کو اس خطے میں اپنے مفادات کی حفاظت کے لئے فوجی ریاست کی ضرورت تھی لیکن بین القوامی مجبوریوں کے باعث ایسا کرنا ناممکن تھا جس کے لئے پاکستان کو نیم فوجی ریاست کی شکل میں آزاد کیا گیا جس کے اقتدار پر بظاہر تو شیروانیوں والے لوگ تھے لیکن اختیار اس وقت بھی آج کی طرح اس دور کے جنرل باجوہ کے پاس تھا۔

یہی وجہ ہے کہ ستر سال گزر جانے کے باوجود پاکستانی فوج اب بھی غیر ملکی فوج کا کردار ادا کر رہی ہے۔۔۔اس کے فوجی مدرسے میں اب تک وہی نصاب پڑھایا جاتا ہے جو کسی زمانے میں برطانیہ سے تیار ہو کر آیا تھا اور اس مدرسے کے طالبان کو اب بھی اعلی تربیت کے لئے برطانیہ اور امریکہ کے فوجی مدرسوں میں بھیجا جاتا ہے۔

جہاں تک بات پوری فوج کے غدار ہونے کی ہے تو یہ بات مجھے درست نہیں لگتی۔۔۔فوج کے other ranks کے سپاہی تو سارے کے سارے محبِ وطن ہیں لیکن مسئلہ یہ ہے کہ ان سب کی بھی برین واشنگ اسی طرح کی جاتی ہے جس طرح بہت سارے پاکستانیوں کی ہو چکی ہے جو اپنے بچوں کے منہ سے نوالہ چھین کر فوج کے لئے ہتھیار خریدنے کے لئے پیسے دیتے ہیں اور سمجھتے ہیں کہ پاکستان کی سرزمین پر سوائے ان چھیل چھبیلے کرنیلوں جرنیلوں کے اور کوئی محب وطن نہیں ہے۔۔۔یہی لوگ ہیں جو ٹینکوں کے آگے لیٹ کر ہماری ماوں بہنوں کو دشمن سے بچا رہے ہیں۔

میرے ایک دوست نے جب آرمی جوائن کی۔۔۔ٹریننگ مکمل کرنے کے بعد یونٹ میں ڈیوٹی سنبھال لی۔۔۔ایک بار جب وہ چھٹی پر گھر آیا تو اس نے اپنا افسری کا طریقہ کار مجھ سے شئیر کیا اور بتایا کہ وہ اپنے جوانوں کا جذبہ بلند کرنے کے لئے اور وطن کے لئے ہر ممکن قربانی پر آمادہ کرنے کے لئے وہ بہت جذباتی تقریر سے کام لیتا ہے۔۔۔انہیں emotional blackmail کرنے کے لئے اس بات پر زور دیتا ہے کہ غیرت مند لوگ اپنے ملک کی حفاظت کے لئے اور اپنی ماوں بہنوں کی عصمت کی حفاظت کے لئے سب کچھ قربان کر دیتے ہیں۔۔۔پڑوسی دشمن کی وجہ سے ہمیں بھی ہر وقت یہی خطرہات لاحق ریتے ہیں ۔۔۔اگر ہم نے اپنے وطن کی حفاظت نہ کی تو دشمن ملک پر قبضہ بھی کر لے گا اور ان کی ماوں بہنوں کی عزتیں تار تار کر دےگا۔

اسی طرح فوج کے سپاہیوں کو جب بھی فاٹا، بلوچستان،سندھ یا کسی اور علاقے میں اپنے ہی لوگوں کے خلاف لڑنے کے لئے بھیجا جاتا ہے تو انہیں یہی بتایا جاتا ہے کہ پاکستان خطرے میں ہے اور جن لوگوں کو وہ مار رہے ہیں وہ دشمن کےایجنٹ ہیں۔۔۔اس لئے ضروری ہےکہ اسلام کے قلعے اوراس میں محفوظ تمہاری ماوں بہنوں کو بچانے کے لئے ان غیر ملکی ایجنٹوں کا صفایا کر دیا جائے۔۔۔یہی وجہ ہے کہ فوج کے سپاہی پورے ملک میں اپنے ہی لوگوں کو بیدردی سے ماورائے عدالت ہی قتل کر دیتے ہیں۔

جہاں تک بات ان کرنیلوں اور جرنیلوں کی ہے تو یہ سب اچھی طرح جانتے ہیں کہ ان کو سب سے زیادہ خطرہ پاکستان کے باشعور عوام سے ہے۔۔۔یہی لوگ ٓاج کے فریڈم فائٹرز ہیں جو اس ملک کو غیر ملک فوج کے قبضے سے مکمل طور پر آزاد کروانا چاہتے ہیں۔۔۔ٓازادی کی یہ تحریک ان جرنیلوں کو کسی بھی طور پر گوارا نہیں ہے اس لئے یہ بھی اپنے برطانوی دور والے آبا و اجداد کی طرح اس دور کے فریڈم فائٹرزکو ختم کرنے میں مصروف ہیں۔

1,611 views