Search

باجوائی مارشل لا کی رونمائی کب ہوگی؟ کھریاں کھریاں۔۔۔راشد مراد


ملک اس وقت یقیننا مارشلائی کیفیت میں ہے اور جمہوریت والی رضیہ اس وقت ان غنڈوں میں پھنسی ہوئی ہے جنہیں جرنیلی پشت پناہی حاصل ہے۔۔۔جہاں تک فوج کے پردے سے باہر آکر حکومت کرنے کی بات ہے جسے مارشل لا کا نام دیا جاتا ہے تو وہ مارشل لا اسی وقت لگایا جاتا ہے جب اس کی فرمائش سمندر پار سے آتی ہے۔

جب تک یہ فرمائش نہیں آتی۔۔۔فوج کے جرنیل صبر شکر کرتے ہوئے پردے کے پیچھےسے سیاسی کٹھ پتلیوں کو نچاتے رہتے ہیں۔۔۔ پاکستانی فوجی تاریخ میں شاید ہی کوئی جرنیل ایسا گزراہو گا جس کے دل میں ملک پر باضابطہ حکمرانی کی خواہش نے جنم نہ لیا ہو لیکن زیادہ تر جرنیلی غنچے بن کھلے ہی مرجھا جاتے ہیں۔

وردی والا جرنیل راولپنڈی سے اسلام آباد کی طرف لانگ مارچ اسی وقت شروع کرتا ہے جب شاہراہ دستور پر سیاسی لڑائی جھگڑوں میں شدت آ جاتی ہے اور اس آگ کو بجھانے کےلئے ایسے واٹر ٹینکوں کی ضرورت ہوتی ہے جو کہ صرف اور صرف جی ایچ کیو میں پائے جاتے ہیں۔۔۔اگلی بات کرنے سے پہلے یہ بھی وضاحت کر دوں کی یہ لڑائی جھگڑے شروع کروانے اور انہیں آتش فشاں بنانے کے لئے بھی سارا ایندھن انہی کے گوداموں میں سے آتا ہے جن کے واٹر ٹینک بعد میں اس ٓاگ کو بجھانے کے لئے ٓاتے ہیں اور ملک پر مکمل طور پر قبضہ کر لیتے ہیں۔

مارشل لگانے کے لئے اس سیاسی آتش بازی کا انتظام کرنا تو ان کے لئے کوئی مشکل نہیں ہوتا لیکن اس کے باوجود بھی انہیں اس بات کا انتظار کرنا پڑتا ہے کہ ڈالر والی سرکار کی طرف سے مارشل لا کی فرمائش آ جائے۔۔۔یہ فرمائیش جس خوش قسمت جرنیل کے دور میں آ جائے اسے، ایوب خان، یحی خان ضیا الحق اور پرویز مشرف بننے کا موقعہ مل جاتا ہے اور جس کے دور میں یہ فرمائش نہ آئے وہ بیچارہ جنرل کیانی اور جنرل راحیل شریف کی طرح پردے کے پیچھے سے عمران نیازی کی پسندیدہ امپائر والی انگلی اوپر نیچے کرتا رہتا ہے۔

جنرل باجوہ البتہ اس حوالے سے بہت سارے غیر مارشلائی جرنیلوں سے زیادہ کامیاب ہو گیا ہے کیونکہ اس نے دوسرے جرنیلوں کی طرح دس بیس سیٹیوں پر دھاندلی کروانے کی بجائے پورے کا پورا الیکشن ہی فوج کی مدد سے فتح کر لیا ہے۔۔۔اسی فتح کا نتیجہ ہے کہ ٓاپ کو عمران نیازی جیسی کٹھ پتلی حکومت میں نظر ٓار ہی ہے اور عملا جنرل باجوہ اینڈ کمپنی نے پورے ملک کو غیر اعلانیہ طور پر ٹیک اوور کیا ہوا ہے۔۔۔۔جس دن جنرل باجوہ کو بھی گرین سگنل مل گیا۔۔۔ابا ملک کی معاشی بدحالی کے باوجود ٓاپ کو اسی جگہ دندناتا ہوا ملے گا جہاں پر ان دنوں نکا بھنگڑے ڈال رہا ہے۔


ان جرنیلوں کو اس بات سے کوئی غرض نہیں ہوتی کہ ملک کے معاشی حالات کیسے ہیں۔۔۔انہیں اچھی طرح پتہ ہوتا ہے کہ ان کے بندوقوں کے لئے گولیاں اور ان کے غیر ملکوں اکاونٹس کے لئے ڈالر دینے والے ان کے کھانے پینے کا بندوبست کر دیں گے اور یقیننا ٓاپ علم میں بھی ہو گا کہ ضیا الحق اور پرویز مشرف کے مارشل لا میں پاکستان پر اسلحے اور ڈالروں کی بارش برستی رہی ہے۔۔۔ان دنوں جو ٓاپ ملک کی معاشی بدحالی دیکھ رہے ہیں اس کی وجہ یہی ہے کہ جنرل باجوہ کو ابھی تک مارشل لا کے لئے گرین سگنل نہیں ملا۔

اس نے اپنی جرنیلی ہوس کے لئے ملک پر غیر اعلانیہ قبضہ کر رکھا ہے اور یہی وہ کیفیت ہے جسے آپ نے سیمی مارشل لا کا نام بھی دیا ہے۔۔۔اسی باجوائی مارشل لا کے تحت عمران نیازی اور اس کے گینگ کو سامنے لایا گیا تھا۔۔۔اس گینگ کو لانے کا سب سے بڑا مقصد نواز شریف کی حکومت اور سیاسی مقبولیت کو ختم کرنا تھا۔۔۔اس گینگ نے جنرل باجوہ کی خواہش ففٹی پرسنٹ تو پوری کر دی ہے اور نواز شریف کی حکومت کو سپریم کورٹ کے ہتھوڑا گروپ کی مدد سے ختم کر دیا ہے لیکن یہ سارا گینگ اور اس کے سہولت کار اور جرنیلی سرپرست اپنے مشن کا دوسرا حصہ مکمل نہیں کر پا رہے اور نواز شریف کی مقبولیت نہ صرف قائم ہے بلکہ پہلے سے کہیں زیادہ ہو چکی ہے۔

اسی مشن کو مکمل کرنے کے لئے جنرل باجوہ نے حکومت کے ہر وزیر کے پیچھے ایک فوجی فرشتہ بھی لگا رکھا ہے۔۔۔ان سب کی توجہ صرف اور صرف نواز شریف کی سیاست کو ختم کرنا ہے اور انہیں اس بات کی کوئی پرواہ نہیں کہ اس دوران ملک کی معاشی حالت کتنی خراب ہو گئی ہے۔۔۔اس معاشی بدحالی کا چونکہ فوجی بجٹ پر کوئی منفی اثر نہیں پڑا اس لئے عمران نیازی کے جرنیلی سرپرست اور ان کا لشکر بہت زیادہ پریشان نہیں ہے ۔

ان لوگوں نے مارشل لا لگانے کی تیاریاں مکمل کی ہوئی ہیں اور جیسے ہی ڈالروں والی سرکار نے رضامندی ظاہر کر دی یہ اس سیمی مارشل لا کی جگہ مکمل مارشل لے آئیں گے۔۔۔باوجود اس کے کہ ملک کی معاشی صورت حال بے حد خراب ہے اور جی ڈی پی کی گروتھ بھی نیگیٹو ہو چکی ہے ۔۔۔اور وہ اس لئے کہ انہیں اپنی جرنیلی تاریخ کی روشنی میں پتہ ہے کہ مارشل لگوانے والے ان کر ہر طرح کا خرچہ بھی اٹھائیں گے اور انہیں بین القوامی معاشی بدحالی کی وجہ سے دوسرے ملکوں میں جزیرے خریدنے کے لئے پوری پیمنٹ نہیں تو کم ازکم ڈاون پیمنٹ ضرور دے دیں گے۔

1,657 views2 comments